Community News

Mishael Al Fajji The President Kuwait Sports Promotion and Kuwaiti Boxer Abdul Rahman al Sanad had a Special Meeting with H.E The Ambassador of Pakistan Syed Sajjad Haider in Embassy of Islamic Republic of Pakistan-Kuwait.

Pakistan will host WBC Arabian Sea Belt Boxing Title in Islamabad on January 22, 2022.

Kuwaiti Boxer Abdul Rahman al Sanad is also Participating in this event for ranking fight.

In this regard today Mr Meshael al Fajji ,The President Kuwait Sports Promotion (KSP) and Kuwaiti Representative in WBC along with the Kuwaiti Boxer Abdul Rahman al Sanad ( Weight 70 .Age 28) who is Participating in this fight had a Special Meeting with H.E  Syed Sajjad Haider ,The Ambassador of Pakistan in Pakistan Embassy. The Community Welfare Attachi of Pakistan Embassy Mr Farrukh Amir Syaal, Hafiz Mohammad Shabbir Chairman Pakistan Professional League media wing and Vice president Pakistan  Professional Boxing League-Kuwait.

Mr Hadi Sharif Ali Al Anzi Renownd Journalist of Al Anba News, Mr Inam morganite, "We are Pakistan" were also Present on this occasion.
H.E.  Syed Sajjad Haider ,The Ambassador of Islamic Republic of Pakistan told Mr Mishal Al Fajji that Pakistan has a big name in the World of Sports.

It is the first time Pakistan is hosting a Boxing Championship of this level in Islamabad which is very beautiful city.

Boxers of 16 Countries are Participating in this event. He hope that Kuwaiti Boxer Abdul Rahman al Sanad will return with a Trophy. Mr Maeshal Al Fajji told that Pakistan is our Brotherly Country, it has a big name in the world of Sports.We are Very much excited to participate in this WBC Arabian Sea Belt Fight.

Hafiz Mohammad Shabbir, the chairman Pakistan Boxing Federation Media Section told that Mr Nauman Shah,The President of Pakistan professional Boxing League*  have announced that  Boxers of *some Countries will participate in event. I appreciate Noman Shah the president of (PPBL) Pakistan professional boxing League which is established under the umbrella of World Boxing Council (WBC) having 16 countries under this PPBL for great support and dedication to launch PPBL in all 16 countries.

The country's included in the Arabian Sea Belt Fight are Pakistan, Kuwait, Saudi Arabia,  Qatar, Bahrain, Yemen, Iraq, Oman, Siri Lanka، Somalia, Maldives, Jabooti, Afghanistan, United Arab Emirates, Iran and India. Few of them will join this event. 

With these Boxers, there will be mixed fights termed as Ranking Fights. After these fights Rankings of the Boxers will be decided by the world Boxing Council.

There will be Ranking Fights also, Two Boxers of United Kingdom  and a Boxer of Spain are also coming to Participate in Ranking Fights.

First BELT FIGHT of this Champion ship will be between Pakistani Boxer Muzaffar Khan and Afghani Boxer Ahmad Sameer.

H.E. The Pakistsni Ambassador Syed Sajjad Haider Presented Memorial Shields to Mr Maeshal Al Fajji, Mr Abdul Rahman al Sanad and Mr Hadi Sharif Ali Al Anzi .Mr Mishal Al Fajji also Presented Memorial Shields to H E  Syed Sajjad Haider the Ambassador of Pakistan and  to Hafiz Mohammad Shabbir, the chairman of Pakistan professional Boxing League (Media Section).

The Representatives of Pakistani Media groups Muhammad Ahsan, Mohammad Omer, Shakil Dar, Imtiaz Qureshi, Abid Malik, Javaid Ahmad Saqi were also Present on this occasion.They were invited by Mr Maeshal Al Fajji to cover this exclusive meeting.

Mr Mishal fajji also presented the the Boxing Belt which is going to be played mid  of this year in Kuwait.

Mr Inaam Morganite extended special invitation to Abdul Rahman Alsanad the Kuwaiti fighter to meet the world fastest bowler Shuaib Akhtar in international cricket.

بلڈ ڈونیشن کیمپ ان شاءاللہ اپنے مقررہ شیڈول کی مطابق 4 فروری بروز جمعتہ المبارک کو سنٹرل بلڈ بنک جابریہ میں منعقد ھو گا۔ PSA کی ٹیم سنٹرل بلڈ بنک جابریہ کی انتظامیہ کے ساتھ رابطے میں ھے

پاکستان سپورٹس ایسوسی ایشن کویت کے زیر اہتمام بلڈ ڈونیشن کیمپ اپنے مقررہ شیڈول کے مطابق 4 فروری بروز جمعتہ المبارک سنٹرل بلڈ بنک جابریہ میں منعقد ھو گا۔ کویت میں کرونا کی وجہ سے بدلتے حالات کے تناظر میں پاکستان سپورٹس ایسوسی ایشن کویت کی ٹیم سنٹرل بلڈ بنک جابریہ کی انتظامیہ کے ساتھ مسلسل رابطے میں ھے۔ اور وزارت صحت کے حفاظتی اصولوں اور سنٹرل بلڈ بینک کی ھدایات کے مطابق پاکستان سپورٹس ایسوسی ایشن کویت کے زیر اہتمام بلڈ ڈونیشن کیمپ اپنے مقررہ شیڈول کے مطابق منعقد ھو گا۔ تمام احباب کو شرکت کی دعوت دی جاتی ھے۔

 

PSA Blood Donation Drive will be held on 4th February, 2022 Friday at Central Blood Bank Jabriya from 1:00pm to 6:00 pm

This blood donation camp is dedicated to Mohsin e Pakistan and Mohsin e Islam Late Dr.Abdul Qadeer Khan.

کویت:اعلیٰ کردار اور باعظمت اور معاصرین میں قد آور حیات والی صرف ایک ہی شخصیت قائد اعظم ؒ ہیں۔ یہ بات ایس ایم ظفر معروف قانون دان نے پاکستان عوامی سوسائٹی کویت کے زیر انتظام یاد قائد اعظم کے پروگرام میں کہی۔ پاکستان عوامی سوسائٹی کویت نے اپنی ریت اور روایت کو برقرار رکھتے ہوئے قائد اعظم کے یوم پیدائش کی نسبت اور سلسلے میں ایک پروگرام یاد قائد اعظمؒ سے معنون منعقد کیا۔

پروگرام کی انتظامی حسن اور ترتیب وتزئین جناب عطا الہی نے سرانجام دی ۔ تلاوت، نعت پاکستان اور کویت کے ترانوں کے بعد استقبالیہ کلمات جناب ا نجینئر آصف کمال صدر پاکستان عوامی سوسائٹی ترکی نے ادا کرتے ہوئے مقررین کو خوش آمدید کہا اور کہا کہ ھم بجا طور پہ فخر کرتے ہیں کہ ھمارے قائد نے اکیلے تاریخ رقبہ اور ملک کا حصول ممکن کر د کھا یا۔

پروگرام میں فیاض المعروف فوجی،شاہد وسیم، پاکستان وہاڑی سے جناب عثمان اور اوکاڑہ کیڈٹ کالج سے لکچرار جناب احمد خان اور ترکی سے کالم نگار جناب یاسین شاہین نے قائد کو خراج تحسین اور خراج عقیدت پیش کیا اور انکی عظمت کو سلام پیش کیا۔

کراچی سےشبیر ابن عادل نے پاکستان عوامی سوسائٹی کویت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ھماری تاریخ کا وہ سنہرا نام قائد اعظم ہے جس نے اپنے اعلیٰ جراتمند اور دوراندیش جہاندیدہ قیادت سے برصغیر کے مسلمانوں کے لئے ایک علیحدہ وطن برائے پیروی اسلام لیکر دیا۔



معروف کالم نگار ڈاکٹر ساجد خاکوانی نے کہا کہ فتح مکہ کے بعد اگر کوئی بڑا کام ہے تو وہ قیام پاکستان ہے جس کا سرخیل قائد اعظم محمد علی جناح ہے اور جناح بھی وہ جو ایک حضرت علامہ اقبال علیہ رحمہ کا انتخاب ۔ علامہ اقبال کیسے ایک لادین کو مسلمانوں کی قیادت سونپ سکتے تھے۔ یہ مملکت خداداد صرف اسلام کے سنہرے اصولوں پہ عملدرآمد کے لئے حاصل کیا گیا ہے اور اس عظیم قائد نے اپنے اربوں کے اثاثے بھی تو اس کے معروف علمی مذہبی اداروں کے لیے وقف کر د یئے، کیا ہمیں اس سے سبق نہیں ملتا کہ وہ کیسا پاکستان بنانا چاہتے تھے۔

محترم فیاض خان وردگ معروف شاعر نے قائد کے حضور گلہائے عقیدت پیش کیے۔ مشہور موٹیویشنل مقرر جناب ڈاکٹر عارف صدیقی صاحب نے قائد کی عظمت کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے فرمایا کہ قائد کے سنہرے اصولوں پہ عمل کرکے ہی وہ وطن ممکن کر دیکھایا جا سکتا ہے۔

کلیدی خطبہ صدارت میں معروف محقق مقرر جناب اوریا مقبول جان صاحب نے پیش کیا کہ میں پاکستان عوامی سوسائٹی کویت کا شکریہ ادا کیا اور اپنے موضوع کہ کیا قائد سیکولر پاکستان چاہتے تھے پہ اپنا خطبہ پیش کیا اور اپنے کاٹ دار جملے اور حملوں سے قلع قمع کر دیا کہ قائد کا کراچی بار کو خطاب میں اپنے 11 اگست والے خطبہ کی تشریح کرتے ہوئے کہا کہ وہ شرعیہ لا اس ملک میں چاہتے ہیں اور وہی سپریم ہوگا اور سٹیٹ بینک کے افتتاح پہ موقع پہ فرمایا کہ بینکنگ کے باب میں اسلامی اصول کو بنیاد بنا کر ترویج دی جائے اور اس مملکت خداداد میں اسلام کو بطور فائنل کوڈ اپنایا جانا قائد کے پاکستان کی تعبیر ہے۔

آخر میں جعفر صمدانی ایڈووکیٹ صدر پاکستان عوامی سوسائٹی کویت نے تمام شرکاء سامعین محققین، مقررین کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ پاکستان عوامی سوسائیٹی کویت پاکستان اسلام عوام اور شعور کے ساتھ ہمیشہ راہ عمل پر کھڑی رہے گی، آخر میں دعا کے ساتھ اختتام ہوا۔

پاکستان کو پہلی مرتبہ ورلڈ باکسنگ کونسل بحیرہ عرب بیلٹ فائٹ کی میزبانی کا شرف حاصل ہو رہا ہے۔

کویت سمیت 16 ممالک ان مقابلوں میں حصہ لیں گے۔

ورلڈ باکسنگ کونسل بحیرہ عرب بیلٹ فائٹ 22 جنوری کو اسلام آباد میں منعقد ہوگی۔اس بات کا اعلان پاکستان پروفیشنل باکسنگ لیگ کے صدر جناب نعمان شاہ نے گذشتہ روز اسلام آباد میں ایک پریس کانفرنس میں کیا۔

کویتی باکسر عبدالرحمن السند ( وزن 70 کلوگرام عمر 28 سال) رینکنگ فائٹ میں شرکت کریں گے اور اس چیمپئن شپ میں کویت کی نمائندگی کریں گے۔

یہ ورلڈ باکسنگ کونسل بیلٹ ہے جس میں 16 ممالک شرکت کریں گے۔ اس بیلٹ کیلئے بحیرہ عرب ٹائٹل باکسنگ مقابلے منعقد ہونے والے ہیں۔

نعمان شاہ نے مزید بتایا کہ اس چیمپئن شپ کی پہلی بیلٹ فائٹ پاکستانی باکسر مظفر خاں اور افغانی باکسر احمد سمیر کے درمیان ہو گی۔

تین رینکنگ مقابلے بھی منعقد ہونگے۔ ان مقابلوں کیلئے دو برطانوی اور ایک اسپینی باکسر بھی پاکستان پہنچیں گے۔
جو ممالک بحیرہ عرب بیلٹ چیمپئن شپ میں حصہ لے رہے ہیں ان میں پاکستان ، کویت،سعودی عرب، قطر، بحرین، یمن، عراق، عمان، سری لنکا، صومالیہ، مالدیپ، جبوتی،افغانستان، متحدہ عرب امارات، ایران اور انڈیا شامل ہیں۔ ان ممالک کی تنظیم کے صدر نعمان شاہ کی زیر صدارت مندرجہ بالا سولہ ممالک میں پروفیشنل باکسنگ کو پروموٹ کیا جائے گا-
ان باکسروں کے درمیان۔ مکسڈ فائٹس کے نام سے رینکنگ فائٹس ہونگی۔ ان مقابلوں کے بعد ورلڈ باکسنگ کونسل باکسروں کی رینکنگ کے بارے میں فیصلہ کرے گی۔

یہ پہلا موقعہ ہو گا کہ پاکستان اس لیول کے باکسنگ چیمپئن شپ کی میزبانی کرے گا جس میں مختلف وزن کی کٹیگریز کے میچز کھیلے جائیں گے۔
کویت میں پاکستانی کمیونٹی کی ممتاز شخصیت حافظ محمد شبیر جو پاکستان پروفیشنل باکسنگ لیگ میڈیا سیکشن کے نائب صدر ہیں، وہ کویت پروفیشنل باکسنگ لیگ کے بھی نائب صدر ہیں۔انہوں نے بتایا کہ ورلڈ باکسنگ کونسل میں کویت کے نمائندے اور کویت اسپورٹس پروموشن ( کے ایس پی ) کے صدر جناب مشعل الفجی 4 جنوری 2022 کو سفارتخانہ میں عزت ماب سفیرپاکستان سید سجاد حیدر سے خصوصی ملاقات کریں گے۔جناب مشعل الفجی نے تمام میڈیا نمائندوں کو اس ملاقات کی کوریج کیلئے دعوت دی ہے۔

انصاف ویلفیئر سوسائٹی کویت کے زیر انصرام، پی ٹی آئی کویت کے صدر پیر امجد حسین کی زیرِ سرپرستی، بانیء پاکستان قائدِاعظم محمد علی جناح کے 145 ویں یومِ ولادت کی پروقار تقریب کا انعقاد۔
جس میں سفیرِ پاکستان برائے کویت سید سجاد حیدر نے بطور مہمانِ خصوصی اور کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی اور پاکستانی فیملیز کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

مورخہ 25 دسمبر بروز ہفتہ ہوٹل ملینیئم کویت میں انصاف ویلفیئر سوسائٹی اور پی ٹی آئی کویت کے زیرِ انصرام اور صدر پی ٹی آئی کویت پیر امجد حسین کی زیرِ سرپرستی بانیء پاکستان قائدِ اعظم محمد علی جناحؒ کے145 ویں یومِ ولادت کے سلسلے میں ایک عظیم الشان اور فقید المثال پروگرام کا انعقاد کیا گیا. جس میں سفیرِ پاکستان پروگرام کے مہمانِ خصوصی تھے، پاکستانی کمیونٹی، پاکستانی فیملیز اور کویت میں مقیم تحریک انصاف کے کارکنان کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ پروگرام میں، تقاریر، حاضرین محفل سے سوال و جواب اور ملی نغمے پیش کیے گئے۔ پروگرام کی نظامت محمد فیصل اور وومن ونگ کی آرگنائزر محترمہ صائمہ رانی نے کی، جبکہ انصاف میڈیا سیل کے ممبر اور سابق انفارمیشن سیکرٹری یاسر قاضی نے کویت اور پاکستان کے قومی ترانے پیش کیے۔ پیر امجد حسین صدر انصاف ویلفئیر سوسائٹی نے خطبہ استقبالیہ دیتے ہوئے سفیر پاکستان، تمام کمیونٹی ممبران اور کارکنان کی آمد پر اُن کا شکریہ ادا کیا اور قائداعظم محمد علی جناح کی شخصیت اور کردار کے بارے اظہارِ خیال کیا اور اس بات کی تاکید کی کہ ہم سب کو مل کر ان کے بتائے ہوئے اقوال پر عمل کرنا ہو گا اور یہی ہماری ترقی اور بقا کا راز ہے۔ اس رنگا رنگ تقریب کا آغاز آیات بینات سے قاری سعید الرحمن اعوان نے کیا جبکہ نعت رسول مقبول صلی اللہ علیہ وسلم کی سعادت سید علی رضا نے حاصل کی۔ معزز مہمانان گرامی نے اپنے اپنے خطبات میں قائد اعظم محمد علی جناح جناح کی شخصیت اور ان کے کردار پر مدلل گفتگو کی۔ اور سفیر پاکستان سید سجاد حیدر میں اپنے خطاب میں کہا کہ پاکستانی ایک عظیم قوم ہیں، بہادر نڈر اور ہر شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والے پاکستانی لوگ اپنی اپنی فیلڈ میں انتہائی پروفیشنل، دل جمی اور محنت سے کام کرنے والے لوگ ہیں۔ اگر قوموں کے ذہن اور دل میں پاکستانیوں کی یہ عظمت میں کئی مواقع پر دیکھتا ہوں اور اور غیر ملکیوں سے اپنے پاکستانیوں کی صلاحیت کے بارے مثبت بات سن کر فخر کرتا ہوں کہ دیار غیر میں مقیم ہر شخص اپنے اپنے کردار اور اپنے اپنے کام سے اپنے وطن عزیز کی نمائندگی کر رہا ہے۔ میں آپ سب کو یہ نصیحت کرتا ہوں کہ "ہر فرد ہے ملت کے مقدر کا ستارہ" کے مصداق آپ میں سے ہر شخص اس عظیم ملت کے مقدر کا ستارہ ہے ہم سب کو اپنی شخصیت اور کردار کو قائداعظم علیہ الرحمہ کے بتائے ہوئے اصولوں ایمان اتحاد اور نظم کی عملی تصویر بننا ہوگا۔ سفیرِ پاکستان سید سجاد حیدر نے پیر امجد حسین، اور انصاف ویلفیئر سوسائٹی کویت کا عظیم

الشان پروگرام کے انعقاد پر شکریہ ادا کیا اور مبارکباد پیش کی۔
انصاف ویلفیئر سوسائٹی کے سابق نائب صدر نائب صدر اور انصاف ایگزیکٹیو کمیٹی کے موجودہ سینئر وائس چیئرمین جناب شہزاد الرحمن بٹ جو اس اس پروقار تقریب کے چیف آرگنائزر تھے، آصف جمال صاحب، ملک تبسم صاحب، خالد منہاس، عتیق الرحمان اور دیگر ان کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے اتنی محنت سے یہ شاندار اور یادگار تقریب کے انتظامات کو کڑی محنت سے مکمل کیا۔ اس رنگا رنگ تقریب میں شہزاد الرحمن بٹ صاحب، ڈاکٹر کائنات صاحبہ، جناب ناصر عباص اور سید علی رضا نے ملی و قومی نغموں کی صورت قائدِاعظمؒ کو خراجِ تحسین پیش کیا۔ پروگرام اور سب سے اعلی منفرد بات یہ تھی کہ پروگرام میں قائداعظم محمد علی جناح اور پاکستان سے متعلق حاضرین محفل سے سوال جواب بھی کئے گئے اور درست جوابات دینے والوں کو بیش قیمت انعامات بھی دیئے گئے۔ پاکستانی کمیونٹی کی بزرگ شخصیت اور عمران خان کو آئیڈیل ماننے والی معتبر شخصیت عبید الرحمن آرائیں نے حاضرین محفل سے خطاب کرتے کرتے قائدِ اعظمؒ کے اقوال حاضرین محفل کو پڑھ کر سنائے اور ان کی عہد حاضر میں ضرورت پر زور دیا۔ اسلامی جمہوریہ پاکستان کے کمیونٹی ویلفیئر اتاشی نے فرخ امین سیال نے اظہارِخیال کرتے ہوئے کہا کہ قائد اعظم نا صرف ایک عظیم مدبر ایک عظیم رہبر اور لیڈر تھے بلکہ وہ ایک عظیم سیاستدان بھی تھے۔ انصاف ویلفیئر سوسائٹی ایگزیکٹیو بورڈ کے چیئرمین اخلاق احمد ملک نے مہمانوں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہاں کے "ذرا نم ہو تو بڑی زرخیز ہے مٹی ساقی" کے مصداق آج بھی ہزاروں مثالیں موجود ہیں کہ پاکستانی پاکستان میں رہ کر یا باہر جا کر ہر جگہ وطن عزیز کا مثبت چہرہ اقوام عالم کو دکھا رہے ہیں۔ آخر میں قائد اعظم محمد علی جناح اور دیگر شہدائے وطن کی ارواح کے ایصال ثواب اور ان کی بلندیِ درجات کے لئے فاتحہ خوانی اور وطن عزیز پاکستان کی سربلندی اور ترقی کے لیے خصوصی دعائیں کی گئیں۔ قائداعظم کی سالگرہ کا کیک کاٹا گیا اور حاضرین نے مجلس کو پرتکلف عشائیہ دیا گیا۔

Full Album: https://www.facebook.com/media/set/?set=a.4634296746668604&type=3

Live Video: https://www.facebook.com/media/set/?set=a.4634296746668604&type=3

 

کویت : 24دسمبر 2021کو کویت میں منطقہ جلیب الشویخ ایریا میں پاکستان انگلش سکول میں سوسائٹی آف پاکستانی ڈاکٹرز ان کویتکے طرف سے کورونا کی طویل بندش کے بعد بیسواں فری میڈیکل کیمپ کا انعقاد کیا گیا۔جن میں پرانے اور تجربہ کار ڈاکٹروں کے علاوہ نئے انے والے ڈاکٹروں،نرسز،ٹیکنیشنز اور فارمسسٹوں نے شرکت کی،کیمپ میں لوگوں کا رش شروع سے زیادہ تھا اور یہ کیمپ باقی تمام کیمپوں سے زیادہ کامیاب اور شاندار رہا۔

تقریبا ًچودہ سو سے زیادہ لوگوں نے اس کیمپ سے استفادہ کیا،میڈیکل سپیشلسٹ،سرجنز،نیورو سرجنز،گائنی سپیشلسٹ،ای این ٹی سپیشلسٹ،رومیٹالوجسٹ،آی سپیشلٹوں کے علاہ ہر قسم کے سپیشلٹی کے ماہرین موجود تھے۔ای سی جی،الٹرا ساونڈ،شوگر اور بلڈ پریشر چیک کرنے کی تمام سہولت موجود تھی۔



جلیب الشویخ کے وسیع و عریض پاکستانی سکول میں تمام سہولیات موجود ہونے کی وجہ سے اور سکول کے طلبہ،پاکستانی کمیونٹی کے تنظیمات کے ولنٹیرز،کمیونٹی کے تمام تنظیموں کی سربراہان کی موجودگی اور سفارہ پاکستان کے تمام افسران خصوصی طور سفیر محترم سید سجاد احمد اور کمیونٹی ویلفیئر انچارج فخر سیال کی موجودگی اور سر پرستی کی وجہ سےکیمپ بہت کامیاب رہا۔کمیونٹی کے سب سے زیادہ ہر دلعزیز اور ہمیشہ کے لئے سوسائٹی کے تمام ایکٹیوٹی کو سپانسر کرنے والے عارف بٹ جو کہ کچھ دن پہلے پاکستان تشریف لے گئے تھے مگر واپس آکر انہوں نے کیمپ کو سپانسر کیا۔

جو انکی کمیونٹی اور قوم و ملک کے ساتھ بے مثال محبت کا ثبوت ہے،پچھلے کیمپوں کی طرح بلکہ ان سے بھی زیادہ اس بار دوا ئیوں کی وافر مقدار موجود تھی۔ہر قسم کی دوائیاں جو کہ شاید ہسپتالوں میں غیر ملکیوں کے لئے نہیں مہیا کی جاتی ہیں وافر مقدار میں موجود تھی۔اس سلسلے میں کویت پیشنٹ فنڈ اور کویت سعودی پارمسیوٹیکل کمپنی کے علاوہ انفرادی افراد نے بھی ڈونیٹ کئے تھے مگر سوسائٹیکی طرف سے بہت سے دوائیوں خرید کر انے والے لوگوں کو مفت تقسیم کی گئیں۔



ساڑھے بارہ بجے سے شروع ہونے والا کیمپ ساتھ بجے تک جاری ر ہا اور پاکستانی کمیونٹی کے علاوہ انڈین،بنگلا دیشی،مصری،سوری اور باقی ممالک کے لوگوں نے اس سہولت سے فا ئدہ اٹھایا،آخر میں ایک مختصر سی تقریب میں سوسا ئٹی کے صدر ڈاکٹر شجاع نے تمام میڈیکل سٹاف کا شکریہ ادا کیا اور سفارہ پاکستان کے علاوہ،پاکستانی کمیونٹی کے تمام تنظیمات،سکول کے انتظامیہ،میڈیا پرسنزاور کیمپ کے سپانسر عارف بٹ کا خصوصی شکریہ ادا کیا اور خدمات پیش کرنے والوں کے عزت افزا ئی کے لئے خصوصی سرٹیفکیٹ آ ئندہ تقریب میں دینے کا اعلان کیا۔

 

For picture Album click the link:

https://www.facebook.com/media/set?vanity=PakistanisInKuwait&set=a.4625301274234818

Live Video on facebook Link

https://fb.watch/a6PyJ9iS_M/

Message of Ambassador of Pakistan

https://fb.watch/a6PDYTs4_5/

 

 

حافظ محمد شبیر کا پاکستانی نزاد امریکی بزنس میں نعیم۔ملک کے اعزاز میں عشائیہ
کویت ( نمائندہ خصوصی ) کویت میں کرونا بحران کے بعد پاکستانی کمیونٹی کی رونقیں آہستہ آہستہ بحال ہو رہی ہے۔ کرونا بحران کے بعد پاکستانی کمیونٹی کی رونقیں بحال کرنے کا سہرا کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی ممتاز کاروباری و سماجی شخصیت حافظ محمد شبیر کےسر جاتا ہے جنہوں نے گزشتہ امریکہ سے انے والے پاکستانی نژاد برطانوی و امریکی بزنس مین نعیم ملک کے اعزاز میں مقامی ریستوران راجدھانی میں ایک عشائیہ کا اہتمام کیا جس میں کمیونٹی کی سرکردہ شخصیات اور تقریباً تمام تنظیموں کے صدور نے شرکت کی۔ حافظ محمد شبیر نے تمام مہمانوں کا فردآ فردآ بڑی گرمجوشی سے استقبال کیا۔ تقریب کی نظامت کے فرائض کمیونٹی کی ممتاز شخصیت اور اسلامک ایجوکیشن کمیٹی کے رہنما انعام مورگانائٹ نے بڑی خوبصورتی سے انجام دئیے، تقریب کی صدارت سفارتخانہ پاکستان کے کمیونٹی ویلفئر اتاشی فرخ عامر سیال نے کی جبکہ مہمان خصوصی پاکستانی نژاد برطانوی و امریکی بزنس مین نعیم ملک تھے۔ کارروائی کا باقاعدہ آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوا جس کی سعادت حافظ عبدالرحمن نے حاصل کی ، قصیدہ بردہ شریف قاری مختار نے پیش کیا۔ ابتدائی کلمات کیلئے تقریب کے میزبان حافظ محمد شبیر کو اسٹیج پر آنے کی دعوت دی گئی، انہوں نے سفارتخانہ پاکستان کے کمیونٹی ویلفئر اتاشی فرخ عامر سیال کا شکریہ ادا کیا کہ مختصر نوٹس پر ان کی دعوت قبول کی،انہوں نے تمام مہمانوں کو بھی خوش آمدید کہا جو چند گھنٹوں کے مختصر نوٹس پر تشریف لائے،انہوں نے کہا کہ کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی ایک گلدستہ کی مانند ہے جو ایک آواز پر اکٹھی ہو جاثی ہے۔ انہوں نے کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی کاوشوں سے راولپنڈی میں قائم ہونے والے فرنینڈز اسپتال کا ذکر کیا،وہ پاکستان میں اپنے حالیہ قیام کے دوران اسپتال کادورہ کر کے ائے ہیں، سابق ائیر چیف سہیل امان، کویت سے پاکستان جانے والے ڈاکٹرز ظفر شیخ اور افتخار نیازی اس کو کنٹرول کر رہے ہیں،شفافیت کے بارے میں شبہات دور ہو چکے ہیں، کمیونٹی کو پہلے کی طرح بڑھ چڑھ کر اس کار خیر میں حصہ ڈالنا چاہئے ،یہ اسپتال مفت علاج کی سہولیات فراہم کر رہا ہے۔ کمیونٹی کی ممتاز شخصیت اور عوامی نیشنل سنٹر کویت کے صدر ڈاکٹر جہانزیب نے مختصر خطاب میں نعیم ملک کو خوش آمدید کہا اور کرونا بحران کے بعد پہلی مرتبہ کمیونٹی کو اکٹھا کرنے پر حافظ محمد شبیر کو خراج تحسین پیش کیا۔ کویت پاکستان فرینڈشپ ایسوسی ایشن کے صدر رانا اعجاز حسین ایڈووکیٹ نے اشعار کی صورت میں حافظ محمد شبیر اور نعیم ملک کو خراج تحسین پیش کیا۔


سوسائٹی اف پاکستانی ڈاکٹرز ان کویت کے صدر ڈاکٹر شجاع الدین نے بھی حافظ محمد شبیر کو خراج تحسین پیش کیا کہ انہوں نے مختصر نوٹس پر کمیونٹی کو ایک چھت تلے جمع کیا، انہوں نے نعیم ملک کو خراج تحسین پیش کیا۔ انہوں نے اعلان کیا کہ سوسائٹی اف پاکستانی ڈاکٹرز ان کویت 24 دسمبر کو پاکستان انگلش اسکول جلیب الشیوخ میں کرونا بحران کے خاتمہ کے بعد پہلا فری میڈیکل کیمپ منعقد کر رہی ہے جس میں ۔ڈاکٹرز مختلف امراض کے مریضوں کو مفت کنسلٹینس فراہم کریں گے۔ملک محمد اعظم نے بھی حافظ محمد شبیر کو کمیونٹی کو اکٹھا کرنے پر خراج تحسین پیش کیا اور نعیم ملک کو خوش امدید کہا۔ کمیونٹی کی ممتاز شخصیت اور اوورسیز پاکستانیز فاؤنڈیشن (او پی ایف ) کے بورڈ اف گورنرز کے ممبر ماجد علی چوہدری نے کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کو خراج تحسین پیش کیا جو ایک اواز پر اکٹھے ہو جاتے ہیں، انہوں نے سفارتخانہ پاکستان کے کمیونٹی ویلفئر اتاشی فرخ عامر سیال کو بھی خراج تحسین پیش کیا جو کویت میں ذمہ داریاں سنبھالنے کے بعد پہلی۔مرتبہ کمیونٹی کے کسی پروگرام میں شرکت کر رہے تھے انہوں نے نعیم ملک کو بھی خراج عقیدت پیش کیا جو امریکہ اور برطانیہ میں رہ کر بھی پاکستان کا نام روشن کر رہے ہیں۔ مسلم لیک ( ن ) یوتھ ونگ گلف کے چیف آرگنائزر محمد عرفان ناگرہ نے بھی حافظ محمد شبیر کی کمیونٹی کئے خدمات کو سراہا اور نعیم ملک کو خوش آمدید کہا، مسلم سنٹر (ن ) کویت کے سیکرٹری جنرل ثاقب نثار جن کی دعوت پر نعیم ملک کویت تشریف لائے حافظ محمد شبیر کا اتنی شاندار تقریب منعقد کرنے پر شکریہ ادا کیا، انہوں نے نعیم ملک کا بھی خاص طور پر شکریہ ادا کیا جو ان کی صاحبزادی کی منگنی کی تقریب میں شرکت کیلئے خاص طور پر امریکہ سے کویت تشریف لائے۔ مسلم سنٹر ( ن ) کے صدر اور کمیونٹی کی ممتاز شخصیت میاں محمد ارشد نے بھی حافظ محمد شبیر کو خراج تحسین پیش کیا اور نعیم کو کویت میں خوش آمدید کہا۔ سفارتخانہ پاکستان کے کمیونٹی ویلفئر اتاشی فرخ عامر سیال نے اپنے صدارتی خطاب مین کہا کہ انہیں بڑی خوشی محسوس ہو رہی ہے۔کہ وہ پہلی مرتبہ کسی پاکستانی تقریب میں شرکت کر رہے ہیں جس پر وہ حافظ محمد شبیر کے شکر گزار ہیں کہ انہوں نے کمیونٹی کو ایک چھت تلے جمع کیا، ان کی اج پہلی مرتبہ نعیم ملک سے ملاقات ہوئی ،انشاء اللہ یہ سلسلہ جاری رہے گا،وہ پاکستانی کمیونٹی میں ا کر بڑی خوشی محسوس کر رہے ہیں ۔تقریب کے مہمان خصوصی نعیم ملک نے خطاب کرتے ہوئے حافظ محمد شبیر کا شکریہ ادا کیا کہ انہون نے ان کے اعزاز میں عشائیہ کا اہتمام کیا،وہ ثاقب حسنین کے بھی شکر گذار ہیں جنہوں نے انہیں کویت انے کی دعوت دی۔ وہ دنیا بھر کے کئی ممالک میں جا چکے ہیں مگر جتنی عظیم پاکستانی کمیونٹی کویت میں ہے انہوں نے کہیں نہیں دیکھی۔ آخر میں مولانا عارف جاوید محمدی نے کویت اور پاکستان کی ترقی و سلامتی کیلئے دعا کرائی۔ مہمانان کیلئے پرتکلف عشائیہ کا بھی اہتمام کیا گیا تھا۔ کھانے کے دوران نعیم ملک شرکاء سے گھل مل۔ گئے جو ان لمحات کو محفوظ کرنے کیلئے ان کے ساتھ تصاویر بنواتے رہے۔

 

Click for full Album: https://www.facebook.com/media/set/?vanity=PakistanisInKuwait&set=a.4587241348040811

Go to top